پلکیں جھاڑُو کے تصور سے دَمک اُٹھتی ہیں

پلکیں جھاڑُو کے تصور سے دَمک اُٹھتی ہیں

پلکیں جھاڑُو کے تصور سے دَمک اُٹھتی ہیں
راستہ آپؐ کی گر راہ گزر لگتا ہے
Built By UrduKit (www.UrduKit.com)
Not yet rated

No Comments

Add a comment:

Code
*Required fields