جب غزل کھول کے ’’ تعویذ ‘‘ پڑھی ہو گی مری

جب غزل کھول کے ’’ تعویذ ‘‘ پڑھی ہو گی مری

جب غزل کھول کے ’’ تعویذ ‘‘ پڑھی ہو گی مری
چیخ مشکل سے کلیجے میں دَبائی ہو گی
Built By UrduKit (www.UrduKit.com)
Not yet rated

No Comments

Add a comment:

Code
*Required fields