عَدل ہوتا رہے پر کوئی سزا نہ پائے

عَدل ہوتا رہے پر کوئی سزا نہ پائے

عَدل ہوتا رہے پر کوئی سزا نہ پائے
شعبدہ بازی کی تاریخ بڑھا دی جائے
شہزاد قیس کی کتاب "اِنقلاب" سے انتخاب
Built By UrduKit (www.UrduKit.com)
Not yet rated

No Comments

Add a comment:

Code
*Required fields