اِس میں حسیں بتوں کا تصور مقیم ہے

اِس میں حسیں بتوں کا تصور مقیم ہے

اِس میں حسیں بتوں کا تصور مقیم ہے
دِل چھوٹا سومنات ہے محسوس تو کرو
شہزاد قیس کی کتاب "اِنقلاب" سے انتخاب
Built By UrduKit (www.UrduKit.com)
Not yet rated

No Comments

Add a comment:

Code
*Required fields