دِہقان کے اِفلاس پہ دِل خون میں تر ہے

دِہقان کے اِفلاس پہ دِل خون میں تر ہے

دِہقان کے اِفلاس پہ دِل خون میں تر ہے
مزدُور کی حالت پہ لَہُو کھول رہا ہے
شہزاد قیس کی کتاب "اِنقلاب" سے انتخاب
Built By UrduKit (www.UrduKit.com)
Not yet rated

No Comments

Add a comment:

Code
*Required fields